الرضا
 
سید غلام رضا رضوی

کسانی که پيام­های خدا را می­رسانند و از او می­ترسند و از هيچ کس جز او نمی­ترسند، و خدا برای محاسبه کردن کافی است.سورة احزاب، آیة 39

عشق کے بام و در سجاتا ہوں

شمع الفت کی میں جلاتا ہوں

نام ہو چاہے جن مزاروں کا

سبکی بگڑی میں ہی بناتا ہوں

میرا شیوہ نہیں ہے بیزاری

میں محبت کے گر سکھاتا ہوں



موضوعات مرتبط: اشعار
برچسب‌ها: نیکیاں, بھول, ہوں, گاتا, عباس

ادامه مطلب
نوشته شده در تاريخ سه شنبه بیست و چهارم آذر ۱۳۹۴ توسط SAYED GULAM RAZA RIZVI BALRAMPORI

1۔ بحر متقارب مثمن سالم ۔۔۔ فعولن فعولن فعولن فعولن ۔۔۔ بھلا ہے بھلا ہے بھلا ہے بھلا ہے

2۔ بحر متقارب مثمن محذوف ۔۔۔ فعولن فعولن فعولن فعَل ۔۔۔ بھلا ہے بھلا ہے بھلا ہے بھلا

3۔ بحر متدارک مثمن سالم ۔۔۔ فاعلن فاعلن فاعلن فاعلن ۔۔۔ خوب ہے خوب ہے خوب ہے خوب ہے

4۔ بحر ہزج مثمن سالم ۔۔۔ مفاعیلن مفاعیلن مفاعیلن مفاعیلن ۔۔۔ بہت بہتر بہت بہتر بہت بہتر بہت بہتر

5۔ بحر ہزج مسدس سالم ۔۔۔ مفاعیلن مفاعیلن مفاعیلن ۔۔۔ بہت بہتر بہت بہتر بہت بہتر



موضوعات مرتبط: اشعار
برچسب‌ها: خوب, عمدہ, بہتر, کمال, ہے

ادامه مطلب
نوشته شده در تاريخ سه شنبه بیست و چهارم آذر ۱۳۹۴ توسط SAYED GULAM RAZA RIZVI BALRAMPORI

برزمین میرزا غالب

بازیچۂ اطفال ہے دنیا میرے آگے

ہوتا ہے شب و روز تماشہ میرے آگے

                                             

میں عشق علیؑ کا کبھی سودا نہ کروں گا

لا کر کے کوئی رکھ دے جو دنیا میرے آگے

ہٹ جاؤ کہا شیر نے دریا سے لعینوں

ہے جان اگر پیاری نا آنا میرے آگے

لشکر کو سمجھتا ہوں میں جب خاک کا ذرہ

پھر کیسے بچے گا کوئی تنہا میرے آگے



موضوعات مرتبط: اشعار
برچسب‌ها: مریے آگے, دنیا, لعینوں, تنہا, سکینہ

ادامه مطلب
نوشته شده در تاريخ سه شنبه بیست و چهارم آذر ۱۳۹۴ توسط SAYED GULAM RAZA RIZVI BALRAMPORI

خمینیت کو مٹانے کی آج سازش ہے

ہے ناز اپنی سیاست پے اور تکبر ہے

بتا دو جاکے یہ باطل سیاستوں کو رضاؔ

خمینی فرد نہیں آج اک تفکر ہے



موضوعات مرتبط: اشعار
برچسب‌ها: خمینی, سازش, مٹانے, تکبر
نوشته شده در تاريخ سه شنبه بیست و چهارم آذر ۱۳۹۴ توسط SAYED GULAM RAZA RIZVI BALRAMPORI

میں نے کہا امام زماں سے کہ آیئے

چہرے سے اپنے پردۂ غیبت اٹھائیے

اک بار میرے دل کا کہا مان جایئے

ہم تشنگان دید کو جلوہ دیکھائیے

آجائیے کہ دل کا چمن لہلہا اٹھے

قدموں کو چوم کر یہ جہاں مسکرا اٹھے

کب سے ہے مجھکو یوسف زہرا کا انتظار

پلکیں بچھائے راہ میں بیٹھا ہوں بے قرار

آجایئے کہ آپکے آنے سے ہے بہار

دل بھی نثار آپ پہ یہ روح و جاں نثار

بیٹھا ہوں کب سے زلف پریشاں سنوار کے

لے لوں بلائیں حسن کا صدقہ اتار کے



موضوعات مرتبط: اشعار
برچسب‌ها: رضا, کردار, امام زمانہ, چاہیئے, خالی بیاں

ادامه مطلب
نوشته شده در تاريخ دوشنبه بیست و سوم آذر ۱۳۹۴ توسط SAYED GULAM RAZA RIZVI BALRAMPORI

بس اشارہ سے ہی بتا دیجے

اپنے ہونے کا کچھ پتہ دیجے

مجھکو کرنا ہے آپ کا دیدار

کب ہے آنا ذرا بتا دیجے

دور رہ کرکے دل پے کیا گزری

دل کا احوال کچھ سنا دیجے



موضوعات مرتبط: اشعار
برچسب‌ها: بتا, دیجے, آنے, دل, پر

ادامه مطلب
نوشته شده در تاريخ دوشنبه بیست و سوم آذر ۱۳۹۴ توسط SAYED GULAM RAZA RIZVI BALRAMPORI

دین اسلام کی عظمت غم شبیر سے ہے

مختلف قوموں میں وحدت غم شبیر سے ہے

رب اکبر کی عبادت غم شبیر سے ہے

جو عبادت میں ہے نکہت غم شبیر سے ہے

غم سرور کو جدا کرنے کی اک سازش ہے

گر نمازیں ہو جدا اس سے فقط ورزش ہے



موضوعات مرتبط: اشعار
برچسب‌ها: نماز, عزاداری, مقصد, سجدہ, اذان

ادامه مطلب
نوشته شده در تاريخ دوشنبه بیست و سوم آذر ۱۳۹۴ توسط SAYED GULAM RAZA RIZVI BALRAMPORI

المدد اے میرے سرکار چلے بھی آؤ

شیعوں پے چلتی ہے تلوار  چلے بھی آؤ

تیرے چہرے کی زیارت ہے میرے دل کا علاج

عشق میں تیرے ہے بیمار چلے بھی آؤ

حرملا شمر و یزید بیٹھے ہیں سب مسند پر

کوئی ان میں نہیں مختار چلے بھی آؤ



موضوعات مرتبط: اشعار
برچسب‌ها: شیعوں کے, مددگار, گلاب, چلے, آؤ

ادامه مطلب
نوشته شده در تاريخ پنجشنبه پنجم آذر ۱۳۹۴ توسط SAYED GULAM RAZA RIZVI BALRAMPORI

خوش رہو علم کو اے دل سے لگانے والو

اے جوانی کو مدرسوں میں بتانے والو

وادئ جہل میں اے شمع جلانے والو

خون سے مصحف اسلام کو لکھ نے والو

گرد اسلام کے  چہرے سے ہٹایا تم نے

علم سے اپنی شریعت کو بچایا تم نے



موضوعات مرتبط: اشعار
برچسب‌ها: علماء, علم, کتابوں, تبلیغ, رفاقت

ادامه مطلب
نوشته شده در تاريخ پنجشنبه پنجم آذر ۱۳۹۴ توسط SAYED GULAM RAZA RIZVI BALRAMPORI

اسلام کےصحیفہ کا عنوان بن گیا

رہ کر دیار عشق میں سلمان بن گیا

حیدر کےدر کوقبلہ سمجھکر نماز عشق

کرکےادا وہ سچا مسلمان بن گیا



موضوعات مرتبط: اشعار
برچسب‌ها: سلمان, دیار, عشق, حیدر
نوشته شده در تاريخ پنجشنبه پنجم آذر ۱۳۹۴ توسط SAYED GULAM RAZA RIZVI BALRAMPORI

در بدرکی ٹھوکریں کھاتہاہو پھرتا تھا میں

یک بیک مجھکو میری قسمت نے یہ آواز دی

جا جھکا دے اپنی پیشانی در شبیرپر

فطرس بےپر کوجس نے پر دئے پرواز دی



موضوعات مرتبط: اشعار
برچسب‌ها: در, بدر, آواز, دی
نوشته شده در تاريخ پنجشنبه پنجم آذر ۱۳۹۴ توسط SAYED GULAM RAZA RIZVI BALRAMPORI

علی علی ہے علی ولی ہے علی ہی نبیوں کی زندگی ہے

سمجھ نہ پائے یہ ملا حافظ علی ہی اسرار بندگی ہے

جہان روشن علی کے دم سے ،ہے دین کامل علی کے دم سے

علی ہی اسرارکبریا ہے علی ہی مومن کی بندگی ہے

ہے جس نے رشتہ علیؑ سے توڑا تو اس نے منھ کبریا سے موڑا

علیؑ ارادوں میں پختگی ہے علیؑ ہی عرفان و آگہی ہے



موضوعات مرتبط: اشعار
برچسب‌ها: علی, زندگی, نبیوں, ملک, رضا

ادامه مطلب
نوشته شده در تاريخ پنجشنبه پنجم آذر ۱۳۹۴ توسط SAYED GULAM RAZA RIZVI BALRAMPORI

رازو رمز     الہی    کا    خزانہ    زہرا

دل مومن کی عقیدت کا مدینہ زہرا

سارے نبیوں کی زبانوں کا ترانہ زہرا

جسکو  معبود  تراشے  وہ  نگینہ  زہرا       

کل رسولوں کے صحیفوں کا تو عنوان بنی

اورمحمدؐ کے لئے بولتا قرآن بنی



موضوعات مرتبط: اشعار
برچسب‌ها: نبی, زہرا, گھیر, لیا, قرآن

ادامه مطلب
نوشته شده در تاريخ پنجشنبه پنجم آذر ۱۳۹۴ توسط SAYED GULAM RAZA RIZVI BALRAMPORI

زمانہ جان لے میں سیدہ کی چادر ہوں

میں منزلت میں ولی و وصی سے بہتر ہوں

نہیں میں کرتی ہوں بس یوں ہی افتخار سنو

ہے رتبہ کیا میرا جاکر بتول سے پوچھو

نبی ولی و وصی اور رسول سے پوچھو

جو سایہ بن کے یہ بادل سروں ہے چھایا ہے

ردائے فاطمہ زہرا کا ایک کونا ہے



موضوعات مرتبط: اشعار
برچسب‌ها: سیدہ کی چادر, زمانہ, سایہ, فگن, رضا

ادامه مطلب
نوشته شده در تاريخ پنجشنبه پنجم آذر ۱۳۹۴ توسط SAYED GULAM RAZA RIZVI BALRAMPORI

ہو  بہو   مرسل     آعظم    کا    سراپا     تیرا

تیری  رفتار   بھی   گفتار   بھی   لہجہ   تیرا

قلب قرطاس پے پاکیزہ لہو  سے  میں نے

روشنی  پھیل  گئی نام جو لکھا تیرا

 



موضوعات مرتبط: اشعار
برچسب‌ها: فاطمہ, تیرا, غلام, روشنی, نام

ادامه مطلب
نوشته شده در تاريخ پنجشنبه پنجم آذر ۱۳۹۴ توسط SAYED GULAM RAZA RIZVI BALRAMPORI

مجھے کربلا لے چلو

ہے زندان میں بابا کتنا اندھیرا مجھے کربلا لے چلو

نہیں تو میں مر جاؤں گی گھٹ کے بابا مجھے کربلا لے چلو

بہت یاد آتا ہے ہر لمحہ بابا

رہوں گی بن اصغر کے میں کیسے تنہا

یا اصغر کو لا دو یا اے میرے بابا مجھے کربلا لے چلو



موضوعات مرتبط: اشعار
برچسب‌ها: بابا, زندان, مجھے, لے, چلو

ادامه مطلب
نوشته شده در تاريخ چهارشنبه چهارم آذر ۱۳۹۴ توسط SAYED GULAM RAZA RIZVI BALRAMPORI

ۢالحمد الذی جعل اللسان مفتاحاًلحمدہ ،نحمدہ ونصلّی علیٰ رسول الانام والہ الطیّبین الطاھرین۔

            قارئین محترم یہ مضمون جو آپکی خدمت میں حاضر ہے یہ ایسا

گلدان ہے جسمیں لگی ہوئی ہر شاخ ایک انمول گل کی حامل ہے کہ

جسے ہزاروں تلاش و کوشش کے بعد اس گلدان میں جمع کیا گیا ہے یہ

گلدان آپکی خاطر سجایا گیا ہے تاکہ آپ اسے اپنے خانۂ ذہن کی زینت

بنائیںاور اسکی خوشبو سے مشام عقل کو روشن اور معطر کریں اورہر

صبح اسکے دلفریب رنگوں اور خوشبوؤں سے ا پنی آنکھوں کے نور میں

اضافہ کرکے زمانے کے پر آشوب ماحول کو علمی بنائیں امید ہے ان گلوں

کے باغبان کی زحمتوں کو با خوبی درک کریں گے اور اس پیکر عاصی کو

گل داد و تحسین سے نوازیں گیں اور ساتھ ہی ساتھ اسکی آرائش

میںکوئی کمی ہو تو مطّلع فرمائیں گیں۔

مثل کا لغوی معنی

            عربی زبان میںمثل کے لغوی معنی شبیہ اور نظیر کے ہیں

،اور''مَثَل''''مِثل''مَثیل''شَبَہ 'شِبَہ'شَبیہ کے معنی میں ہے مَثل الشئی با

الشئی''ایک چیزکو دوسری چیز کا شبیہ قرار دیا،لیکن کبھی کبھی مثل

عبرت کے معنی میں بھی آتا ہے جیسا کہ اس آیۂ شریفہ میں ارشاد ہوتا

ہے ''فجعلنا ہم سلفاًمثلاًللاخرین''(زخرف ٥٦)

انھیں ہم نے آئندہ کے لئے عبرت قرار دیا ،اسکے علاوہ دوسری آیتوں میں

مثل  علامت اور نشانی کے معنی میں استعمال ہوا ہے جیسا کہ خدا وند

متعال نے حضرت عیسیٰ کے لئے ارشاد فرمایا''و جعلناہ مثلاًلبنی

اسرایئل''ہم نے عیسیٰ کو بنی اسرائیل کے لئے علامت قرار دیا(زخرف ٥٩)

 



موضوعات مرتبط: مقالہ
برچسب‌ها: ضرب, المثل, لغوی, فارسی, اردو

ادامه مطلب
نوشته شده در تاريخ چهارشنبه چهارم آذر ۱۳۹۴ توسط SAYED GULAM RAZA RIZVI BALRAMPORI

جوانوں قوم کے پھر دین ہے ہر آن خطرے میں

ہماری زندگی و بندگی ایمان خطرے میں

ہماری آستیں کے سانپ ہیں پھپکارتے ہمکو

یہی بس سوچ کر ہے وقت کا شیطان خطرے میں

کہیں پے نظر آتش اور کہیں تفسیر مرضی سے

انھیں دو دہشتوں کی بیچ ہے قرآن خطرے میں



موضوعات مرتبط: اشعار
برچسب‌ها: خطرے میں, قرآن, داعش, مستحق, رضا

ادامه مطلب
نوشته شده در تاريخ چهارشنبه چهارم آذر ۱۳۹۴ توسط SAYED GULAM RAZA RIZVI BALRAMPORI

اے زائر حسینؑ تیرا کیا ہے مرتبہ

تجھ پر درود پڑھتے ہیں سارے ملائکہ

خوش آمدید کہتے ہیں خوش ہو کے انبیاء

تجھکو دعائیں دیتی ہین زہرائے مرضیہ

تیری ہر ایک سانس عبادت خدا کی ہے

زائر پے شہ کے خاص عنایت خدا کی ہے



موضوعات مرتبط: اشعار
برچسب‌ها: زائر, سیدہ, امام حسینؑ, کربلا, حور

ادامه مطلب
نوشته شده در تاريخ چهارشنبه بیست و هشتم مرداد ۱۳۹۴ توسط SAYED GULAM RAZA RIZVI BALRAMPORI

مقدمہ ٔ مترجم:

محمد و آل محمد کی عزاداری منانا شیعت کا طرۂ امتیاز اور اسکی بقا ہے،اہل بیت علیہم السلام کی خوشی میں شاد ہونا اور انکے غم میں غمگین ہونا ہماری ذمہ داری اور ہمارا شیوہ ہے ہم شیعوں کا اہل بیت سے لو لگانا اور انکی یاد کو تازہ کرنا دشمنوں کے دلوں میں کانٹا بنکر چھبتا ہے لہذا وہ اسے کم رنگ اور سست کرنے کے لئے ہر ممکنہ کوشش کرتے اور نت نئے راستے اپناتے ہیں،کبھی عزاداری کو بدعت بتاتے تو کبھی زیارت اور توسل کو بے دینی کہتے اور اسے شرک سے تعبیر کرتے ہیں اور جب ان حربوں کو اپنانے کے بعد ناکام نظر آئے تو دشمنی کا پینترا بدل کر دوسرے طریقے سے اسے ختم کرنے کی شازیشیں کر تے اور طرح طرح کے شبہات کی جال بچھا کر سادہ لوح شیعوں کو عزاداری سے دور کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔

انکی ان شازشوں کو دیکھتے ہوئے اہلبیت کے در پر جبین سائی کرنے والے علماء نے ان کے ہر حربوں کو ناکام اور انکے ہر شبہ کا منھ توڑ جواب دیا ہے۔

دشمنوں کی جانب سے تراشے گئے چند نئے شبہوں کا منھ توڑ جواب قارئین کے پیش خدمت ہے۔

سوال ۱۔غصب خلافت کے بعد کیوں حضرت علی         نے خلافت کے لئے کوئی اقدام نہیں کیا ؟

پہلی بات یہ ہے کہ حضرت علی         نے غصب خلافت کے فوراً بعد ہی اسکے خلاف اقدام کیا ہے جیسا کہ اہل سنت کے مشہور عالم و مفسر جناب آلوسی اس بارے میں لکھتے ہیں کہ عمر نے غلاف شمشیر سے حضرت زہرا ؐ کے پہلو پر مارا اور تازیانہ سے آپکے بازو مبارک کو زخمی کیا۔شدت زخم سے فاطمہ سلام اللہ علیہانے صدا بلند کی ’’یا ابتاہ‘‘اچانک حضرت علی         اپنی جگہ سے اٹھے اور عمر کا گریبان پکڑ کر زمین پر پٹک دیا اور گھونسوں سے ناک اور گلے پر خوب مارا(تفسير آلوسي :3/124)

آلوسی کا اس قضیہ کو نقل کرنا چاہے جس غرض سے ہو اس بات کی دلیل ہے کہ غصب خلافت پر حضرت علی         کا اقدام شیعوں کے قرن اول اور دوم کے منابع میں موجود ہے ۔



موضوعات مرتبط: مختلف
برچسب‌ها: زہرا, اعتراض, علی, عمر, خلیفہ

ادامه مطلب
نوشته شده در تاريخ پنجشنبه بیست و دوم مرداد ۱۳۹۴ توسط SAYED GULAM RAZA RIZVI BALRAMPORI
راہ حق کے اے مجاہد اے خمینی مرحبا

پیرو راہ ولایت اے حسینی مرحبا

تیرے گفتار و عمل کی دلنشینی مرحبا

تیرا اطمینان تیری بالقینی مرحبا 

مارا یوں دیں کا طمانچہ ہوگئے رخسار شل

کر دیئے ہر تانا شاہی کے لب و افکار شل



موضوعات مرتبط: اشعار
برچسب‌ها: شل, خمینی, ایران, قرار, عمل

ادامه مطلب
نوشته شده در تاريخ پنجشنبه بیست و دوم مرداد ۱۳۹۴ توسط SAYED GULAM RAZA RIZVI BALRAMPORI
نعرہ حیدر لگاؤ شوق سے

دشمنوں کا دل جلاؤ شوق سے

فاطمہ مجلس میں آئیں گی ضرور

فرش مجلس کا بچھاؤ شوق سے

شیر بچوں کو بنانے کے لئے

ذکر حیدر کا سناؤ شوق سے

پیاس کا غلبہ نہ ہو وقت نزع

نذر شربت پے دلاؤ شوق سے

کاندھا تیری لاش کو دیں گے حسین

تعزیہ سر پر اٹھاؤ شوق سے



موضوعات مرتبط:
برچسب‌ها: شوق, شاہ دیں, سے, بلاؤ, رضا

ادامه مطلب
نوشته شده در تاريخ پنجشنبه بیست و دوم مرداد ۱۳۹۴ توسط SAYED GULAM RAZA RIZVI BALRAMPORI

سسکیاں کہتی ہیں صغریٰ کی اب آجا اصغر

میری سوئی ہوئی قسمت کو جگا جا اصغر

تیری خوشبو ہے بسی اب بھی میری باہوں میں

ہے جھلکتا تیرا چہرا بھی میری یادوں میں


 


موضوعات مرتبط: اشعار
برچسب‌ها: یاد حضرت علی اصغر میں حضرت صغریٰ کا نوحہ

ادامه مطلب
نوشته شده در تاريخ یکشنبه بیستم بهمن ۱۳۹۲ توسط SAYED GULAM RAZA RIZVI BALRAMPORI

دیکھ لوں گنبد خضرأ تو قرار آجائے

میرے امید کے گلشن میں بہار آجائے 


رہ میں خاموش نہ ہو جائے کہیں شمع حیات

قبل از شام اجل انکا دیار آجائے



موضوعات مرتبط: اشعار
برچسب‌ها: نعت نبی اکرم صلی اللہ علیہ السلام

ادامه مطلب
نوشته شده در تاريخ یکشنبه بیستم بهمن ۱۳۹۲ توسط SAYED GULAM RAZA RIZVI BALRAMPORI
1- سليم بن قيس، صص 585، 863- 868.

2- بحارالانوار، ج 22، صص 484- 485; ج 28، ص 269، 279- 299، 306- 309، 390، 411

 ج 30، صص 348- 350 ج 31، ص 126; ج 43، ص 197; ج 95، صص 351- 354; ج 53، 

ص 14- 23.



موضوعات مرتبط: مختلف
برچسب‌ها: حضرت زہراؐ سے مربوط اسناد

ادامه مطلب
نوشته شده در تاريخ یکشنبه سیزدهم بهمن ۱۳۹۲ توسط SAYED GULAM RAZA RIZVI BALRAMPORI

یہی سوچ کر آگیایہ دیوانہ

دیار رضا میں ہے اپنا ٹھکانا

رَضا کي رِضا میں ہے مرضی خدا کی

رِضائے  رضا ہے میرا آشیانہ

یتیمی کے دن گن رہیں وہ اپنی

نہیں زندہ مردہ کوئی جنکا رہبر

میں کیوں کھاؤں ٹھوکر ادھر کی ادھر

مجھے تیرے در پے فقط سر جھکانا



موضوعات مرتبط:
برچسب‌ها: امام رضاعلیہ السلام

ادامه مطلب
نوشته شده در تاريخ سه شنبه هشتم بهمن ۱۳۹۲ توسط SAYED GULAM RAZA RIZVI BALRAMPORI

جہاں کو چین ملے گا تیرے ظہور کے بعد 

اجالا نور کا ہوگا تیرے ظہور کے بعد

سیاہ رات جہالت کی چھائی ہے ہر سو  

 سویرا علم کا ہوگا تیرے ظہور کے بعد



موضوعات مرتبط: اشعار
برچسب‌ها: جہاں کو چین ملے گا تیرے ظہور کے بعد

ادامه مطلب
نوشته شده در تاريخ سه شنبه هشتم بهمن ۱۳۹۲ توسط SAYED GULAM RAZA RIZVI BALRAMPORI

پردہ کی حفاظت کر نہ سکا زینبؐ سے بہت شرمندہ ہوں

نیزے پے نہ سر ٹھرے گا میرا زینبؐ سے بہت شرمندہ ہوں

پیدا ہوئے تو مادر نے کہا زینبؐ سے غافل مت ہونا

نہ دودھ میں بخشوں گی تیرا زینبؐ سے بہت شرمندہ ہوں



موضوعات مرتبط: اشعار
برچسب‌ها: حضرت ابا الفضل العباس ؑ

ادامه مطلب
نوشته شده در تاريخ دوشنبه هفتم بهمن ۱۳۹۲ توسط SAYED GULAM RAZA RIZVI BALRAMPORI
موت ایک ایسی اٹل حقیقت ہے جس سے فرار کسی انسان کے بس میں نہیں چاہے وہ کسی مضبوط قلعہ میں ہو، یا دنیا کے کسی کونے میں ،موت ایک ایسا راستہ  ہے جس ہر انسان کو گزرنا ہے ،



موضوعات مرتبط: مقالہ
برچسب‌ها: موت کا استقبال

ادامه مطلب
نوشته شده در تاريخ دوشنبه هفتم بهمن ۱۳۹۲ توسط SAYED GULAM RAZA RIZVI BALRAMPORI

1
توقع جو تم سے ہے
قالَ الصادقُ عليهِ السّلام: لَسْتُ أُحِبُّ أَنْ أَری الشَّابَّ مِنْكُمْ إلاَّ غَادِياً فِي حَالِيْنِ: إِمَّا عَالِماً أَوْ مُتَعَلِّماً.
امام صادق  فرماتے ہیں :مجھے پسند نہیں کہ تم شیعوں کا کوئی جوان ان دو حالتوں سے خالی ہو دانشمند یا طالب العلم ۔الامالي للطوسي، ص 303
 



موضوعات مرتبط:
برچسب‌ها: 12 سے ١٩سال کے نوجوانوں کیلئے چالیس حدیثیں

ادامه مطلب
نوشته شده در تاريخ شنبه پنجم بهمن ۱۳۹۲ توسط SAYED GULAM RAZA RIZVI BALRAMPORI
لوگوی دوستان
عمارنامه : نجوای دیجیتال بصیرت با دیدگان شما AmmarName.ir
معببر سایبری فندرسک
 
 
  
لوگوي دوستانلوگوي دوستانلوگوي دوستان
لینک دوستان



بالای صفحه



تمامی حقوق این وبلاگ برای الرضا محفوظ و انتشار مطالب با ذکر منبع مجاز می باشد.